انٹرنیشنلپاکستانتازہ ترینصفحہ اول

سعودی عرب کے شہریوں پر چار ممالک کی خواتین سے شادی کرنے پر پابندی

ویب ڈیسک : سعودی عرب نے اپنے شہریوں پر پاکستان، بنگلہ دیش، چاڈ اور میانمار کی خواتین سے شادی کرنے پر پابندی عائد کر دی ہے۔

سعودی میڈیا کے مطابق ان ممالک کی  خواتین سے شادی کے خواہش مند سعودی مردوں کو پہلے انتظامیہ سے اجازت نامہ لینا پڑے گا۔

سعودی عرب کی حکومت نے مردوں کو غیر ملکی عورتوں سے شادی کرنے کی حوصلہ شکنی کے لیے شادی سے پہلے حکومت سے اجازت لینا لازمی قرار دیا ہے۔

غیر ملکی عورت سےشادی کے خواہش مند سعودی مردوں پر لازم ہے کہ اس کی عمر پچیس برس ہو اور اگر وہ پہلے سے شادی شدہ ہیں تو ایسا میڈیکل سرٹیفکیٹ مہیا کریں جو ظاہر کرے ان کی پہلی بیوی معذور ہے یا کسی دائمی مرض میں مبتلا ہے اور اولاد پیدا کرنے کی صلاحیت سے محروم ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اس اقدام کا مقصد غیر ملکی خواتین سے شادی کے خواہش مند سعودی شہریوں کی حوصلہ شکنی کرنا ہے، تاہم اگر کوئی غیر ملکی خاتون سے شادی کا خواہش مند ہے بھی تو اسے اجازت دینے کیلئے نئے طریقہ کار بھی متعارف کرائے جا رہے ہیں جن پر عمل درآمد کے بعد ہی کسی کو اجازت مل سکے گی۔

غیر ملکی خواتین سے شادی کی خواہش رکھنے والے سعودی شہریوں کو حکومت کی رضامندی بھی درکار ہو گی جس کیلئے اسے ایک درخواست دینا پڑے گی، جبکہ طلاق یافتہ مرد طلاق کے چھ مہینے بعد تک یہ درخواست دینے کے اہل نہیں ہوں گے۔

درخواست گزار کی کم از کم عمر بھی 25 سال ہونی چاہئے جبکہ اسے ڈسٹرکٹ میئر کے دستخط شدہ شناختی دستاویزات جمع کروانے کے علاوہ فیملی کارڈ کی کاپی بھی درخواست کے ساتھ جمع کروانی ہو گی۔

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close