پاکستانصفحہ اولویڈیوز

خاتون وکیل کو اغواء کے 7 دن بعد سڑک کنارے پھینک دیا گیا

ویب ڈیسک: دیپالپور میں 15 اگست کو اغواء ہونے والی خاتون ایڈووکیٹ بازیاب ہوگئی۔

 تفصیلات کے مطابق معروف وکیل ارشاد نسرین ایڈوکیٹ کو 15 اگست دیپالپور سے اغواء کیا گیا تھا۔ ارشاد نسرین ایڈوکیٹ کے بقول انکے مختلف لوگوں سے پیشہ وارانہ تنازعات چل رہے تھے۔ اغواکار 7 روز بعد مغویہ کو میلسی وہاڑی کی حدود میں چھوڑ کرفرار ہوگئے۔ مغویہ اپنے گھر واپس پہنچ چکی ہیں۔ پولیس نے مغویہ کے بیٹے کی مدعیت میں نامعلوم اغواکاروں کے خلاف مقدمہ درج کرلیا ہے۔ پولیس اصل حقائق تک پہنچنے کے لیے مصروف تفتیش ہے۔

دیپالپور کی وکیل اور چھ بچوں کی ماں نسرین ارشاد کو 14 اگست کو اغواء کیا گیا، زیادتی اور ظلم وتشدد کا نشانہ بنا کر سڑک کنارے پھینک دیا گیا۔ ویڈیو میں خاتون کے پریشانی واضع تھی اور اسکے لیے بولنا بھی مشکل ہو رہا تھا اور وہ  لوگوں سے  درخواست کر رہی تھی کہ اس کے سر پر چادر رکھی جائے۔ وکلا برادری نے اس معاملے پر شدید احتجاج کیا اور سپریم کورٹ سے اس کیس پر نوٹس لینے کا مطالبہ بھی کیا۔

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close