راجن پور میں سوتیلے باپ کے اپنی ہی بیٹی سے زبردستی نکاح کر لیا ہے۔

چودہ سال کی متاثرہ لڑکی نے تھانہ سٹی پولیس کو اپنا بیان ریکارڈ کراتے ہوئے بتایا ہے کہ میری والدہ کو میرے سگے باپ نے طلاق دے دی تھی جسکے بعد میری والدہ نے اشرف سے دوسری شادی کر لی۔

کمسن لڑکی نے الزام لگایا ہے کہ اسکے سوتیلے والد اشرف نے 27 اگست کو اس سے زبردستی نکاح کر لیا ہے۔ لڑکی کا کہنا ہے کہ اسکے سوتیلے باپ نے نکاح سے پہلے اور بعد میں اسے کئی مرتبہ زیادتی کا نشانہ بنایا۔

لڑکی نے پولیس کو بتایا ہے کہ اس کام میں اسکی سگی ماں نے بھی اشرف کی مدد کی ہے۔ پولیس نے ملزم کو گرفتار کر لیا ہے جبکہ لڑکی کی ماں کو بھی مقدمے میں نامزد کیا ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ لڑکی کو حفاظتی تحویل میں لے لیا ہے، اسکا میڈیکل ٹیسٹ بھی کرایا گیا ہے، میڈیکل رپورٹ آنے کے بعد مزید قانونی کاروائی کی جائے گی۔