روز روز کی مہنگائی کے بعد بالآخر عوام کے لئے خوشخبری، پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کردی گئی۔

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کی سمری پٹرولیم ڈویژن کو موصول ہوئی جسے منظور کر لیا گیا۔

مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان کی ٹویٹ کا عکس

اس بات کا اعلان مشیر اطلاعات و نشریات فردوس عاشق اعوان نے سوشل میڈیا پر اپنے ایک بیان میں کیا ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ حکومت کا یہ اقدام عوام دوست حکومت ہونے کا مظہر ہے، عالمی منڈی میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کا فائدہ حکومت کی بجائے عوام کو منتقل کیا جائے گا۔

مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں نئے پاکستان کا دوسرا سال قومی ترقی، عوامی فلاح و بہبود اور ملک کے لئے نئی خوشخبریاں لے کر آئے گا۔

مشیر اطلاعات نے سوشل میڈیا پر پٹرولیم مصنوعات میں ردوبدل کی جو سمری پیش کی ہے اس کے مطابق ہائی سپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 7 روپے 67 پیسے فی لٹر کمی کی گئی ہے جسکے بعد نئی قیمت 124 روپے 80 پیسے ہوگی۔

پٹرول کی قیمت میں 4 روپے 59 پیسے کمی کے بعد 113 روپے 24 پیسے ہوگی۔ مٹی کے تیل کی قیمت میں 4 روپے 27 پیسے کمی کے بعد 99 روپے 57 پیسے جبکہ ایل ڈی او کی قیمت میں 5 روپے 63 پیسے فی لٹر کمی کے بعد 91 روپے 89 پیسے فی لیٹر ہوگی۔

پٹرولیم مصنوعات کی تبدیل شدہ قیمتیں

۔

پٹرولیم مصنوعات کی نئی قیمتوں پر عملدرآمد یکم ستمبر سے ہوگا