راولپنڈی میں ڈینگی مچھر کے شہریوں پر حملے جاری، گزشتہ 24 گھنٹوں میں مزید 62 شہری ڈینگی کا شکار ہو کر اسپتالوں میں پہنچ گئے، شہر بھر میں تاحال ڈینگی کے حوالے سے ایمرجنسی نافذ ہے

محکمہ صحت حکام کے مطابق راولپنڈی میں ڈینگی مچھر کے حملوں کے بعد مجموعی مریضوں کی تعداد 1436 تک پہنچ چکی ہے۔

صوبائی وزیر صحت یاسمین راشد کا الائیڈ ہسپتال کا دورہ

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران پوٹھوہار ٹاؤن سے 39 جبکہ ائیرپورٹ ہاؤسنگ سکیم اور اس سے ملحقہ علاقوں سے 29 شہری ڈینگی مرض میں مبتلا ہوئے جنہیں اسپتال منتقل کیا گیا ہے، راولپنڈی کے اسپتالوں میں ڈینگی کے حوالے سے نافذ کی گئی ایمرجنسی تاحال برقرار ہے۔

دوسری جانب صوبائی حکومت اور ضلعی انتظامیہ کی جانب سے ڈینگی پر قابو پانے کے لئے شروع کیا گیا کریش پروگرام بھی تاحال ناکام ہے جس پر عملدرآمد کے باوجود روزانہ کی بنیاد پر ڈینگی کے مریضوں کی تعداد میں درجنوں کی شرح سے اضافہ ہو رہا ہے۔

صوبائی وزیر صحت یاسمین راشد الائیڈ ہسپتال میں مریضوں کی عیادت کر رہی ہیں

راولپنڈی میں ڈینگی کی بگڑتی صورتحال پر صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمن راشد نے الائیڈ اسپتالوں کا دورہ بھی کیا اور مریضوں کی بڑھتی تعداد پر تشویش کا اظہار کیا۔

دورے کے دوران صوبائی وزیر صحت کا کہنا تھا کہ مریضوں کو طبی سہولیات کی فراہمی پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا، مریضوں کو جدید طبی سہولیات کی فراہمی کے لیئے اقدامات حکومت کی اولین ترجیح ہے۔