اسلام ہائی کورٹ میں شریف خاندان کے نام ای سی ایل پر ڈالنے کے حوالے سے درخواست کی سماعت

 

سابق وزیر اعظم نواز شریف ان کے  داماد کیپٹن صفدر،بیٹی مریم نواز ، سمدھی اسحاق ڈار اور بیٹوں حسن نواز، حسین نواز کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے لئے داخواست پر سماعت ۔

 

کیس کی سماعت اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق نے کی ۔عدالت نے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کر لیا ۔رائس عبدالواحد ایڈووکیٹ     اور بلال نیازی ایڈووکیٹ عدالت میں درخواست گزار کی طرف سے پیش ہوئے ۔سپریم کورٹ کے ججمنٹ آنے کے نواز شریف کیپٹن صفدر، مریم نواز ، اسحاق ڈار اور حسن نواز، حسین نواز کے جائیداد کی خرید فروخت پر پابندی عائد کیا جائے رائس عبدالواحد ایڈووکیٹ ۔نواز شریف، کیپٹن صفدر، مریم نواز ، اسحاق ڈار اور حسن نواز، حسین نواز کے اکائونٹس بھی منجمد کیا جائیں بلال نیازی ایڈووکیٹ۔نواز شریف اور ان کے خاندان کے خلاف سپریم کورٹ نے نیب ریفرنس دائر کرنے کا حکم دیا تھا ۔نواز شریف، کیپٹن صفدر، مریم نواز ، اسحاق ڈار اور حسن نواز، حسین نواز اگر پاکستان سے باہر جائیں تو پھر واپس نہیں آئیں گے ۔ پاکستانی قوانین کے تحت نواز شریف، کیپٹن صفدر بیٹی مریم نواز ، اسحاق ڈار اور حسن نواز، حسین نواز کے خلاف کارروائی کی جائے بلال نیازی ایڈووکیٹ کی استدعا۔نواز شریف پر منی ٹریل کا جرم ثابت ہو گیا ہے اور پیسے واپس پاکستان نہیں لا رہے ۔ وکیل درخواست گزارشریف اللہ خان ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *