ویب ڈیسک: وزیر اعظم عمران خان کو دوہری شہریت رکھنے والے معاونین رکھنے پر اپنے گھر سے ہی مخالفت کا سامنا کرنا پڑ گیا ہے۔

وزیر اعظم عمران خان کی بہن روبینہ خان نے فیس بک پر پوسٹ کرتے ہوئے لکھا کہ زلفی بخاری جیسے کئی لوگ پاکستان میں موجود ہیں اور ہمیں مزید کسی ایسے شخص کی ضرورت نہیں ۔ انہوں نے لکھا کہ زلفی بخاری نے دعویٰ کیا ہے کہ وہ پاکستان کی مدد کرنے یہاں آئیں ہیں مگر انکے پاس ایسی کوئی مہارت نہیں سوائے اس کے کہ انہوں  نے جو اپنے باپ سے سیکھا۔

اسکے علاوہ ایک اور پوسٹ میں معاونین کے بارے میں لکھا کہ انکے پاس ایسی  کوئی خاص مہارت نہیں جو وہ اس ملک کو دے سکیں بلکہ انکی وفاداری پر ضرور سوال اٹھتے ہیں۔اتنا ہی نہیں ، انہوں نے لکھا کہ ان میں سے کئی غیر ملکی ایجنسیوں کے لیے بھی کام کر رہے ہیں۔

روبینہ خان نے لکھا کہ زلفی بخاری کا بار بار یہ کہنا تضحیک آمیز ہے کہ وہ پاکستان کی مدد کرنے آئے ہیں۔ روبینہ خان نے غصے کا اظہار کرتے ہوئے لکھا کہ زلفی بخاری کا ماضی اور انکی حرکات مسلسل وزیر اعظم عمران خان کے لیے شرمندگی کا باعث بن رہی ہیں۔

روبینہ خان کے خاندان نے رپورٹ ڈائری کو اس بات کی تصدیق کی کہ یہ اکاونٹ روبینہ خان کا ہی ہے اور یہ بیان انکی طرف سے ہی آیا ہے۔