پاناما کیس میں نااہل قرار پانے والے سابق وزیرنوازشریف، مریم نوازاورکیپٹن صفدر احتساب عدالت میں پیش ہوئے۔ فلیگ شپ اور العزیزیہ ریفرنسزمیں نوازشریف کے ضمانتی مچلکے جمع کرا دیے گئے جبکہ ریفرنسزیکجا کرنےکےاسلام آباد ہائیکورٹ کےفیصلے کی کاپی نہ ملنےپرسماعت سات نومبر تک ملتوی کردی گئی۔ عدالت نے گواہوں کی طلبی کےسمن بھی معطل کردیے

نواز شریف کی گاڑی آصف کرمانی نے چلائی۔ مریم نواز اور نواز شریف ایک ساتھ حتساب عدالت پہنچے جبکہ کیپٹن صفدر ان سے کچھ دیر قبل احتساب عدالت پہنچے تھے۔

نواز شریف کی پیشی کے موقع پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ۔ احتساب عدالت کے باہر اور اطراف یں ایک ہزار سے زائد پولیس اور ایف سی کے اہلکار تعینات تھے۔ سیکیورٹی کیلئے رینجرزکا کوئی اہلکار نہیں تھا جبکہ 2 ایس پیز، 6 ڈی ایس پیز، اور 10 انسپکٹرزبھی تعینات تھے۔ اس موقع پر اسلام آباد کے جوڈیشل کمپلکیس میں عام اور غیرمتعلقہ افراد کا داخلہ بند کر دیا گیا