سابق ہاکی اولمپیئن منصور احمد کی حالت ایک بار پھر بگڑ گئی ہے۔ جس کے بعد انہیں وارڈ سے انتہائی نگہداشت کے شعبے میں منتقل کر کے ہارٹ لنگز مشین لگا دی گئی

انچاس سالہ عالمی شہرت یافتہ گول کیپر کا دل صرف بیس فیصد کام کر رہا ہے، ان کے دل میں سات اسٹنٹس ڈالے جا چکے ہیں جبکہ گردوں اور پھیپھڑوں نے بھی کام کرنا چھوڑ دیا ہے، یہی وجہ ہے کہ ڈاکٹروں نے انہیں ہارٹ ٹرانسپلانٹ کا مشورہ دے رکھا ہے۔

سابق گول کیپر منصور احمد نے گذشتہ ماہ دل کے ٹرانسپلانٹ کے لیے بھارت میں علاج کی اپیل کی تھی

منصور احمد کو یہ اعزاز بھی حاصل ہے کہ انہوں نےچوبیس سال قبل پاکستان کو چوتھی مرتبہ ہاکی کا عالمی چیمپیئن بنایا تھا۔