وزیراعظم کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس اسلام آباد میں منعقد ہوا جس میں مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورتحال کے حوالے سے مختلف امور پر غور کیا گیا ہے۔

فائل فوٹو: وزیراعظم عمران خان وفاقی کابینہ کے اجلاس سے خطاب کر رہے ہیں

فائل فوٹو: وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری

اس حوالے سے وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے سوشل میڈیا پر بتایا ہے کہ کابینہ کے اجلاس میں اس بات پر بھی غور کیا گیا ہے کہ بھارت کے لئے زمینی اور فضائی راستے مکمل طور پر بند کردئیے جائیں۔

وفاقی وزیر نے مزید کہا کہ وفاقی کابینہ کے اجلاس میں بھارت کی جانب سے افغانستان کو تجارت کیلئے پاکستانی سرزمین کے استعمال پر مکمل پابندی پر غور کیا گیا جس کیلئے قانونی پہلوؤں کو دیکھا جارہا ہے۔ انکا کہنا تھا کہ معاملات گھمبیر بنانے کی صورتحال بھارت نے شروع کی ہے لیکن اسے ختم ہم کریں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں بھی پاک بھارت کشیدگی کے دوران پاکستان کی جانب سے بھارت کے لئے فضائی اور زمینی راستے بند کئے گئے تھے جس سے بھارت کو کروڑوں روپے کا نقصان اٹھانا پڑا۔ گزشتہ روز قوم سے خطاب کے دوران بھی وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ہم کشمیری بھائیوں کی مدد کے لیے ہر حد تک جائیں گے۔