وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ بھارتی جاسوس کلبھوشن یادو کا مقدمہ عالمی عدالت انصاف میں 19 فروری کو پیش کیا جائے گا، بھارتی جاسوس کے خلاف مضبوط کیس پیش کریں گے۔

مانچسٹر میں میڈیا سے گفت گو کرتے ہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ بھارتی دہشت گرد کلبھوشن کے معاملے پر پاکستان کی قانونی ٹیم 19 فروری کو اپنا مؤقف عالمی عدالت انصاف میں پیش کرے گی، کلبھوشن کو ہماری سر زمین سے گرفتار کیا گیا اور اس نے کارروائیوں کا اعتراف بھی کیا ہے

انہوں نے کہا کہ پاکستان افغانستان میں امن چاہتا ہے، افغان صدر اشرف غنی سے تین ملاقاتوں میں واضح طور پر دوستی اور تعاون کا پیغام دے چکا ہوں، افغان حکومت کو اپنے اندرونی مسائل پر توجہ دینا چاہیے، پاکستان کا کردار نہ ہوتا تو امریکی صدر افغان طالبان سے امن مذاکرات آگے بڑھانے کے لیے درخواست نہ کرتے، امریکا امن عمل میں پیش رفت پر پاکستان کے کردار کا معترف ہے