پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) کے مطابق آج رات 12 بجے تمام مسروقہ

غیر استعمال شدہ فون بند کردیئے جائیں گے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل موبائل فونز کی تصدیق کے لیے پی ٹی اے نے 20 اکتوبر 2018 کی ڈیڈ لائن دی تھی، جسے بعدازاں 15 جنوری تک بڑھا دیا گیا تھا۔

پی ٹی اے کے اعلامیے کے مطابق آج رات 12 بجے تک استعمال ہونے والے موبائل فون کار آمد ہوں گے اور اس کے علاوہ تمام اسمگل شدہ، چوری یا چھینے گئے موبائل فونز بند کردیئے جائیں گے۔
پی ٹی اے نے موبائل فونز کی تصدیق کی تاریخ میں غیرمعینہ مدت تک توسیع کردی
پی ٹی اے کی ترجمان طیبہ افتخار کے مطابق وہ موبائل فون جو چوری شدہ یا چھینے گئے ہیں اور ان کی رپورٹ پی ٹی اے کو کی گئی ہے یا آج کے بعد جو موبائل فون چھینے یا چوری کیے جائیں گے، انہیں پی ٹی اے فوری بلاک کردے گا یا سراغ لگا کر استعمال کرنے والے سے موبائل فون کے اصل مالک کو واپس کرنے کو کہے گا۔

انہوں نے بتایا کہ پی ٹی اے نے اس سلسلے میں ایک واضح نظام وضع کرلیا ہے۔

واضح رہے کہ ماضی میں لاکھوں روپے مالیت کے کئی ہزار موبائل فون چھینے اور فروخت کردیئے گئے مگر پی ٹی اے یا سٹیزن پولیس لائژن کمیٹی (سی پی ایل سی) میں رپورٹ نہ کرنے کی وجہ سے وہ ٹریس نہ ہوسکے۔

اس سلسلے میں پی ٹی اے کا کہنا تھا کہ اگر کوئی مسافر باہر سے موبائل فون لاتا ہے تو ایئرپورٹ پر ٹیکس ادا کرکے اسے قابل استعمال بنایا جاسکے گا۔